aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

وصل کی رات وہ تنہا ہوگا

انجم لدھیانوی

وصل کی رات وہ تنہا ہوگا

انجم لدھیانوی

MORE BYانجم لدھیانوی

    وصل کی رات وہ تنہا ہوگا

    اس پہ حالات کا پہرہ ہوگا

    نیند کیوں ٹوٹ گئی آخر شب

    کون میرے لئے تڑپا ہوگا

    خوشبوئیں پھوٹ کے روئی ہوں گی

    گل ہواؤں میں جو بکھرا ہوگا

    وادئ ذہن سے اٹھتا ہے دھواں

    قافلہ یادوں کا ٹھہرا ہوگا

    جانے کس حال سے گزری ہوگی

    پھول جس شاخ پہ اترا ہوگا

    یاد آئیں گی ہماری غزلیں

    ذکر جب تازہ ہوا کا ہوگا

    چاند کو دیکھ کے چھت پر انجمؔ

    سایہ دیوار سے نکلا ہوگا

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

    GET YOUR FREE PASS
    بولیے