مجھے پسند نہیں ایسے کاروبار میں ہوں

عادل منصوری

مجھے پسند نہیں ایسے کاروبار میں ہوں

عادل منصوری

MORE BYعادل منصوری

    مجھے پسند نہیں ایسے کاروبار میں ہوں

    یہ جبر ہے کہ میں خود اپنے اختیار میں ہوں

    حدود وقت سے باہر عجب حصار میں ہوں

    میں ایک لمحہ ہوں صدیوں کے انتظار میں ہوں

    ابھی نہ کر مری تشکیل مجھ کو نام نہ دے

    ترے وجود سے باہر میں کس شمار میں ہوں

    میں ایک ذرہ مری حیثیت ہی کیا ہے مگر

    ہوا کے ساتھ ہوں اڑتے ہوئے غبار میں ہوں

    بس آس پاس یہ سورج ہے اور کچھ بھی نہیں

    مہک رہا تو ہوں لیکن میں ریگزار میں ہوں

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY