aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر
Khan Rizwan's Photo'

خان رضوان

1982 | دلی, انڈیا

نئی نسل کے ایک اہم شاعر اور ادبی سرگرمیوں کے لئے متحرک

نئی نسل کے ایک اہم شاعر اور ادبی سرگرمیوں کے لئے متحرک

خان رضوان

غزل 24

نظم 1

 

اشعار 8

یہ خد و خال یہ گیسو یہ صورت زیبا

سبھی کا حسن ہے اپنی جگہ مگر آنکھیں

کون گزرا ہے یہ آندھیوں کی طرح

شمع راہ وفا کو بجھاتے ہوئے

کی ہے سرگوشی سر شام مرے دل نے پھر

اس لیے ہم نے لپیٹا نہیں بستر اپنا

ترک تعلقات میں مہجور تو ہوئے

لیکن خیال و خواب میں وہ روبرو رہے

  • شیئر کیجیے

ہم تو اپنے قد کے برابر بھی نہ ہوئے

لوگ نہ جانے کیسے خدا ہو جاتے ہیں

مضمون 3

 

کتاب 5

 

ویڈیو 7

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر
اسیر_درد ہو کر جی رہا ہوں

خان رضوان

حصار_غم سے جو نکلے بھی تو کدھر آئے

خان رضوان

زندگی آئی مجھ کو راس ابھی

خان رضوان

نیند کی سوداگری کرتا ہوں میں

خان رضوان

ٹھہرنا بھول گئی ہیں لہو سے تر آنکھیں

خان رضوان

کبھی مجھے کبھی خود کو بھلا کے دیکھتا ہے

خان رضوان

کوئی دعا ہے یا پھر بد_دعا ہے میرے لیے

خان رضوان

متعلقہ شعرا

"دلی" کے مزید شعرا

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے