Waseem Barelvi's Photo'

وسیم بریلوی

1940 | بریلی, انڈیا

مقبول عام شاعر

مقبول عام شاعر

وسیم بریلوی

غزل 65

نظم 10

اشعار 70

اپنے چہرے سے جو ظاہر ہے چھپائیں کیسے

تیری مرضی کے مطابق نظر آئیں کیسے

جہاں رہے گا وہیں روشنی لٹائے گا

کسی چراغ کا اپنا مکاں نہیں ہوتا

تشریح

اس شعر میں کئی تلازمات ایسے ہیں جن سے اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ وسیم بریلوی شعر میں معنی کے ساتھ کیفیت پیدا کرنے کے فن سے واقف ہیں۔ ’جہاں‘ کی مناسبت سے ’وہیں‘، اور ان دونوں کی رعایت سے ’مکاں‘، ’چراغ‘ کی مناسبت سے ’روشنی‘ اور اس سے بڑھ کر کسی، یہ سب ایسے تلازمات ہیں جن سے شعر میں معنی آفرینی کا عنصر پیدا ہوا ہے۔

شعر کے معنیٔ قریب تو یہ ہوسکتے ہیں کہ چراغ اپنی روشنی سے کسی ایک مکاں کو روشن نہیں کرتا ہے، بلکہ جہاں جلتا ہے وہاں کی فضا کو منور کرتا ہے۔ اس شعر میں ایک لفظ ’مکاں‘مرکزی حیثیت کا حامل ہے۔ مکاں سے یہاں مراد محض کوئی خاص گھر نہیں بلکہ اسپیس ہے۔

اب آئیے شعر کے معنیٔ بعید پر روشنی ڈالتے ہیں۔ دراصل شعر میں ’چراغ‘، ’روشنی‘ اور ’مکاں‘ کو استعاراتی حیثیت حاصل ہے۔ چراغ استعارہ ہے نیک اور بھلے آدمی کا، اس کی مناسبت سے روشنی استعارہ ہےنیکی اور بھلائی کا۔ اس طرح شعر کا مفہوم یہ بنتا ہے کہ نیک آدمی کسی خاص جگہ نیکی اور بھلائی پھیلانے کے لئے پیدا نہیں ہوتے بلکہ ان کا کوئی خاص مکان نہیں ہوتا اور یہ اسپیس کے تصور سے بہت آگے کے لوگ ہیں۔ بس شرط یہ ہے کہ آدمی بھلا ہو۔ اگر ایسا ہے تو بھلائی ہر جگہ پھیل جاتی ہے۔

شفق سوپوری

آسماں اتنی بلندی پہ جو اتراتا ہے

بھول جاتا ہے زمیں سے ہی نظر آتا ہے

  • شیئر کیجیے

دکھ اپنا اگر ہم کو بتانا نہیں آتا

تم کو بھی تو اندازہ لگانا نہیں آتا

وہ جھوٹ بول رہا تھا بڑے سلیقے سے

میں اعتبار نہ کرتا تو اور کیا کرتا

  • شیئر کیجیے

قطعہ 11

گیت 1

 

کتاب 5

 

تصویری شاعری 15

ویڈیو 37

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر
2013 BAHRAIN (Sham-e-Gulzar)

وسیم بریلوی

43rd Shri Ram Kavi Sammelan Held At Modern School , Barakhamba Road , New Delhi on Nov 23 , 2013

وسیم بریلوی

Dhahran Mushaira

وسیم بریلوی

Dubai Mushaira 2014 - part 2

وسیم بریلوی

Hawa Andheron Ke

وسیم بریلوی

Indore Mushaira - Sarahado Se Aage - 2012

وسیم بریلوی

Main Kis Bairi Ke Dwar- Waseem Barelvi

وسیم بریلوی

Sulagti Ankhon Se Unwaney Sham Likhta hai

وسیم بریلوی

Waseem Barelvi - Jashn-e-Waseem Barelvi Houston 2009

وسیم بریلوی

Waseem Barelvi - Lucknow Mahotsav- Main zamane ki

وسیم بریلوی

Waseem Barelvi (Jashn-e-Waseem Barelvi Houston 2009)

وسیم بریلوی

Waseem Barelvi at Mushaira

وسیم بریلوی

Waseem Barelvi at Mushaira

وسیم بریلوی

Waseem Barelvi at Mushaira

وسیم بریلوی

Waseem Barelvi at Mushaira Haidrabad

وسیم بریلوی

Waseem Barelvi Dewa Mahotsav Uski Gali Mein Roz Ka Aana Jana Hai

وسیم بریلوی

Waseem Barelvi Lucknow Mahotsav Nain Se Nain Mila Kar Dekho

وسیم بریلوی

Yaad-e-Masoom Mushaira & Kavi Sammelan, Moradabad 2012

وسیم بریلوی

بیتے ہوئے دن خود کو جب دہراتے ہیں

وسیم بریلوی

تمہاری راہ میں مٹی کے گھر نہیں آتے

وسیم بریلوی

ذرا سا قطرہ کہیں آج اگر ابھرتا ہے

وسیم بریلوی

مجھے بجھا دے مرا دور مختصر کر دے

وسیم بریلوی

میں آسماں پہ بہت دیر رہ نہیں سکتا

وسیم بریلوی

میں اس امید پہ ڈوبا کہ تو بچا لے_گا

وسیم بریلوی

نگاہوں کے تقاضے چین سے مرنے نہیں دیتے

وسیم بریلوی

کیا دکھ ہے سمندر کو بتا بھی نہیں سکتا

وسیم بریلوی

متعلقہ شعرا

"بریلی" کے مزید شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
بولیے