aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر
Azhar Adeeb's Photo'

اظہر ادیب

1949 | گھوٹکی, پاکستان

شاعر،انشائیہ نگار اور ادیب

شاعر،انشائیہ نگار اور ادیب

اظہر ادیب

غزل 16

اشعار 34

ہم نے گھر کی سلامتی کے لئے

خود کو گھر سے نکال رکھا ہے

تو اپنی مرضی کے سبھی کردار آزما لے

مرے بغیر اب تری کہانی نہیں چلے گی

  • شیئر کیجیے

ذرا سی دیر تجھے آئنہ دکھایا ہے

ذرا سی بات پر اتنے خفا نہیں ہوتے

  • شیئر کیجیے

لہجے اور آواز میں رکھا جاتا ہے

اب تو زہر الفاظ میں رکھا جاتا ہے

ہمیں روکو نہیں ہم نے بہت سے کام کرنے ہیں

کسی گل میں مہکنا ہے کسی بادل میں رہنا ہے

  • شیئر کیجیے

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے