Javed Saba's Photo'

جاوید صبا

1958 | کراچی, پاکستان

جاوید صبا

غزل 12

نظم 1

 

اشعار 17

مجھے تنہائی کی عادت ہے میری بات چھوڑیں

یہ لیجے آپ کا گھر آ گیا ہے ہات چھوڑیں

  • شیئر کیجیے

یہ جو ملاتے پھرتے ہو تم ہر کسی سے ہاتھ

ایسا نہ ہو کہ دھونا پڑے زندگی سے ہاتھ

  • شیئر کیجیے

یہ کہہ کے اس نے مجھے مخمصے میں ڈال دیا

ملاؤ ہاتھ اگر واقعی محبت ہے

  • شیئر کیجیے

گزر رہی تھی زندگی گزر رہی ہے زندگی

نشیب کے بغیر بھی فراز کے بغیر بھی

دیکھے تھے جتنے خواب ٹھکانے لگا دیے

تم نے تو آتے آتے زمانے لگا دیے

  • شیئر کیجیے

کتاب 1

 

آڈیو 6

بوندوں کی طرح چھت سے ٹپکتے ہوئے آ جاؤ

بڑی مشکل سے چھپایا ہے کوئی دیکھ نہ لے

تجھ کو پانے کی یہ حسرت مجھے لے ڈوبے_گی

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

متعلقہ شعرا

"کراچی" کے مزید شعرا

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI