noImage

مرزا مسیتابیگ منتہی

مرزا مسیتابیگ منتہی

غزل 25

اشعار 34

خود رحم کیجیے دل امیدوار پر

آپھی نکالئے کوئی صورت نباہ کی

  • شیئر کیجیے

ہے خوشی اپنی وہی جو کچھ خوشی ہے آپ کی

ہے وہی منظور جو کچھ آپ کو منظور ہو

  • شیئر کیجیے

ہے دولت حسن پاس تیرے

دیتا نہیں کیوں زکوٰۃ اس کی

  • شیئر کیجیے

چلے گا تیر جب اپنی دعا کا

کلیجے دشمنوں کے چھان دے گا

یوں انتظار یار میں ہم عمر بھر رہے

جیسے نظر غریب کی اللہ پر رہے

  • شیئر کیجیے

کتاب 1

 

Recitation

aah ko chahiye ek umr asar hote tak SHAMSUR RAHMAN FARUQI

Jashn-e-Rekhta | 2-3-4 December 2022 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate, New Delhi

GET YOUR FREE PASS
بولیے